عالمی ادب

کوئی ایک چیز!! اقتباس ‘پالو کولہو’ | مترجم #مسافرِشَب ایک جرنلسٹ نے مشہ…

کوئی ایک چیز!! 📚💘😳
اقتباس ‘پالو کولہو’ | مترجم #مسافرِشَب

ایک جرنلسٹ نے مشہور فرانسیسی مصنف ‘جِین کوکتو’ سے پوچھا:
”اگر آپ کے گھر میں آگ لگ جائے اور آپ کوئی ایک چیز اپنے ساتھ لے جا سکتے ہوں تو آپ کونسی چیز لے کر باہر نکلیں گے؟“

جِین کوکتو، بیسویں صدی میں مغربی ادبی اور فلمی دنیا میں بہت جانا پہچانا نام ہے۔ کوکتو نہ صرف مصنف تھا بلکہ شاعر، مصور، نقاش، مجسمہ ساز، نقاد اور فلمی پروڈیوسر بھی تھا۔ اپنے وقت کی زیادہ تر مشہور فلمیں خصوصاً فلم ‘بیوٹی اینڈ دا بِیسٹ’ کا پروڈیوسر ڈائریکٹر بھی کوکتو ہی تھا۔ متفرق الفنون ہونے کی وجہ سے کوکتو کا گھر ایک عجائب گھر کا تاثر دیتا تھا۔

چناچہ کوکتو نے ایک نظر اپنے اردگر نوادرات اور قیمتی اشیا پر ڈالی، اُسی نظر میں بیش بہا کتب اور تخلیقی مجسمے دیکھے، دنیا بھر سے جمع کیے گئے یادگاری تحائف دیکھے اور پھر جواب دیا:

”مَیں آگ لے کر گھر سے نکل جاؤں گا۔“

جرنلسٹ اس جواب پر حیران رہ گیا۔ انٹرویو شائع ہونے کے بعد جس جس نے بھی اس جواب کو پڑھا، کوکتو کی تخلیقی صلاحیت کو داد دیے بغیر نہ رہ سکا۔

چلیں، ایک سطح مزید آگے جاتے ہیں۔ اگر آپ موسیٰ ہوں تو کوہِ طُور سے کیا لائیں گے؟ جی بالکل… ایک ایسی آگ لے آئیں گے جو کائنات کے ہر مربع سینٹی میٹر میں بھڑک رہی ہے۔ اگر یہی شعلہء زندگی ہے تو پھر ثابت ہوا کہ ہمارے جسم میں زندگی نہیں بلکہ زندگی کے بحراعظم میں ہمارے جسم ڈوبے ہوئے ہیں۔ گرچہ، سائنسی ثبوت کوئی نہیں مگر یہ خیال شدید تخلیقی قوت سے لبریز ہے۔ ہیلو آگ!!!

Excerpt from “Stories for Parents, Children & Grandchildren” by Paulo Coelho.
#Fire #Jean #Cocteau


بشکریہ
https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/3841902122706959

متعلقہ تحاریر

3 Comments

Back to top button
تفکر ڈاٹ کام
situs judi online terpercaya idn poker AgenCuan merupakan salah satu situs slot gacor uang asli yang menggunakan deposit via ovo 10 ribu, untuk link daftar bisa klik http://faculty.washington.edu/sburden/avm/slot-dana/