منتخب نظمیں

لگے گر ہاتھ میرے تار اُس زُلفِ مُعنبر کا تو ہووے ب…

لگے گر ہاتھ میرے تار اُس زُلفِ مُعنبر کا
تو ہووے باعثِ شیرازہ ان اجزائے ابتر کا

بہ دورِ مے کشی، جب سے تری آنکھوں کو دیکھا ہے
ستارہ تب سے جوں خورشید گردش میں ہے ساغر کا

وہ صیدِ سخت جاں ہوں میں کہ جس کی سخت جانی سے
ہوا جاتا ہے دم برگشتہ وقتِ ذبح خنجر کا

اُڑے ہے بسکہ دل اندر ہوائے نامہ پردازی
ہر اک نالہ ہمارا بال ہے جیسے کبوتر کا

وہ خاکِستر نشیں ہوں میں کہ مثلِ اخگرِ آتش
نہ مجھ کو فکر بالا پوش کا ہے اور نہ بستر کا

کلیجا چَھن گیا ہے آہ و نالے سے مرا یاں تک
کہ اب جو دم نکلتا ہے تو جیسے دُود مِجمر کا

نہ ہو گی جاں کَنی کے وقت ہرگز تشنگی غالب
کہ تو اے مصحفیؔ مدّاح ہے ساقیِ کوثر کا

(غلام ہمدانی مصحفیؔ)

متعلقہ تحاریر

جواب دیں

Back to top button
تفکر ڈاٹ کام
situs judi online terpercaya idn poker AgenCuan merupakan salah satu situs slot gacor uang asli yang menggunakan deposit via ovo 10 ribu, untuk link daftar bisa klik http://faculty.washington.edu/sburden/avm/slot-dana/