منتخب نظمیں

التجا . مرے شکاریو! امان چاہتا ہوں بس اب سلامتی جا…

التجا
.
مرے شکاریو! امان چاہتا ہوں
بس اب سلامتی جاں کی حد تلک اڑان چاہتا ہوں
مرے شکاریو ! امان چاہتا ہوں
میں ایک بار پہلے بھی ہرے بھرے دنوں کی آرزو میں زیر دام آ چکا ہوں
مجھ کو بخش دو
میں اس سے پہلے بھی تو سایہ شجر کی جستجو میں اتنے زخم کھا چکا ہوں
مجھ کو بخش دو
مرے شکاریو۔۔۔۔ امان چاہتا ہوں میں
بس اب سلامتی جاں کی حد تلک اڑان چاہتا ہوں میں
بس ایک گھر زمین و آسمان کے درمیان چاہتا ہوں میں
مرے شکاریو امان چاہتا ہوں میں
.
افتخار عارف

متعلقہ تحاریر

جواب دیں

Back to top button
تفکر ڈاٹ کام
situs judi online terpercaya idn poker AgenCuan merupakan salah satu situs slot gacor uang asli yang menggunakan deposit via ovo 10 ribu, untuk link daftar bisa klik http://faculty.washington.edu/sburden/avm/slot-dana/