مختصر کہانیاں

#hamidnaved کسی شهر میں ایک غریب لڑکا اپنے تعلیم…

#hamidnaved

کسی شهر میں ایک غریب لڑکا اپنے تعلیمی اخراجات پورے کرنے کا لیۓ گھر گھر جاکر چیزیں فروخت کرتا تھا ، ایک دن اس کی کوئی بهی چیز فروخت نهیں هوئی.

کھر سے خالی پیٹ نکلا تھا ،بھوک کی وجه سے اس کی حالت خراب هو رهی تھی لیکن وه کسی سے کھانے کے لیۓ کچھ مانگنے کی ہمت نہیں کر پا رها تھا .

ایک گھر پر اس نے دستک دی تو دروازه ایک نوجوان عورت نے کھولا ، اس نے لڑکے کی شکل دیکھ کر بھانپ لیا که وه بھوکا هے ، خاموشی سے بغیر کوئی سوال کیۓ لڑکے کو دودھ کا گلاس تھما دیا ، دودھ پی کر لڑکے نے اس کی قیمت دریافت کی تو عورت نے کہا:
"ہمدردی اور مہربانی کی کوئی قیمت نهیں ہوتی ”

لڑکا شکریه ادا کر کے چلا گیا ..

اس بات کو ایک عرصه گزر گیا ..

وه عورت ایک شدید قسم کی بیماری میں مبتلا هوگئی ، اس کی بیماری کسی کی سمجھ میں نهیں آرهی تھی ،

شهر کے ایک بڑے ڈاکٹر سے رجوع کیا ،

ڈاکٹر نے اسے دیکھا اور ایک نظر میں پہچان لیا ، اس نے پوری توجه سے اس کا علاج کیا ، عورت کی جان بچ گئی ..

ڈاکٹر نے اسپتال والوں سے کہا که اس عورت کا بل اسے بھجوا دیا جاۓ ، اسپتال والوں نے بل بهجوا دیا ، ڈاکٹر نے بل کے ایک کونے په کچھ لکھا اور واپس اس عورت کو بهیج دیا .

جب بل کا لفافه اس عورت کو ملا تو اس نے ڈرتے ڈرتے لفافه کھولا ، اس کا خیال تھا که اس بل کی ادائیگی کے لیئے اسے اپنے اثاثے فروخت کرنا هوں گے،

بل پر ایک جمله لکھا تھا …

"مکمل ادائیگی ، ایک گلاس دودھ ”

زندگی میں بے لوث کیاگیا کوئی بھی کام کبھی رائیگاں نہیں جاتا ، جو کچھ هم کرتے هیں ، اچھا یا برا ، اس کا بدل جلد یا بدیر همیں ضرور ملتا هے ، لیکن شرط یه هے که بغیر کسی صلے کی تمنا کے کسی کی خوشی کے لیۓ ، کسی سے ہمدردی کے لیئے نیکی کی جاۓ.

متعلقہ تحاریر

جواب دیں

یہ بھی دیکھیں
Close
Back to top button
تفکر ڈاٹ کام
situs judi online terpercaya idn poker AgenCuan merupakan salah satu situs slot gacor uang asli yang menggunakan deposit via ovo 10 ribu, untuk link daftar bisa klik http://faculty.washington.edu/sburden/avm/slot-dana/