☆.مونا لیزا -Mona Lisa (زندہ آنکھوں والی پینٹنگ)…

[ad_1]

☆.مونا لیزا -Mona Lisa
(زندہ آنکھوں والی پینٹنگ)

مونا لیزا ایک ایسا شاہکار ہے جس پر سب سے زیادہ لکھا گیا اور جس کی شہرت آرٹ کی دنیا میں سب سے زیادہ ہے۔اس نایاب پینٹنگ کا مصور اٹلی کا رہنے والا لیونارڈو ڈا ونسی Leonardo da Vinci ہے۔ لیو نارڈو نے اس کو بنانے میں 15 سال لگائے۔وہ 1503 سے 1517 تک مسلسل اس پر کام کرتا رہا۔ تاریخ دان Carmen C. Bambachh نے لکھا ہے کہ لیونارڈو کا ہاتھ 1517 میں مفلوج ہوگیا تھا اور وہ کہا کرتا تھا کہ ابھی بھی یہ پینٹنگ مکمل نہیں ہوئی۔اس کو اٹلی سے فرانس کے بادشاہ فرینکس Francis نے خریدا اور1797 میں یہ پینٹنگ پیرس کے میوزیم Louvre میں عام نمائش کیلیے لگا دی گئی۔دنیا میں اس کی شہرت کا تہلکہ خاص کر اس وقت مچا جب21 اگست 1911 کو اس کو چرا لیا گیا۔دنیا میں اس خبر کو آگ کی طرح پھیلایا گیا اور لوگوں کا تجسس اس کے بارے میں بڑھ گیا۔اس کی تلاش میں کئی ملکوں کے عجائب گھروں اور مصوروں کو زیر تفتیش رکھا گیا آخر کار جنوری 1914 کو اس کو وسنزو پرگیا Vincenzo Peruggia نامی اطالوی سے بازیاب کرایا گیا۔وہ فرانس کے اسی میوزیم میں نگرانی کا کام کرتا تھا اور اس پینٹنگ کو اپنے کوٹ میں چھپا کر لے گیا۔اس کا کہنا تھا کہ وہ اٹلی سے پیار کرتا ہے اور یہ پینٹنگ ایک اطالوی مصور کی ہے چناچہ اس کو اٹلی کے میوزیم میں ہونا چاہیئے۔اس واقعے کے بعد اس پینٹنگ کی حفاظت کا کڑا انتظام کیا گیا اور اس کی نمائش کے اوقات محدود کر دیے گئے۔اس کو سائنسی بنیادوں پر جدید طریقے سے محفوظ کیا گیا ہے ؛ نمی اور درجہ حرارت کا خاص خیال رکھا جاتا ہے ۔ اس کا حفاظتی شیشہ بہت مضبوط ہے اور 500 سال گزرنے پر بھی اس کی چمک میں کوئی خاص فرق نہیں آیا۔1956 میں ایک آدمی نے مونا لیزا کی پینٹنگ پر اس زور سے پتھر مارا کے اس کا نمائشی شیشہ ٹوٹ گیا اور اس کے اندرونی بلٹ پروف شیشے پر بھی خراشیں پڑ گئیں لیکن پینٹنگ محفوظ رہی۔
500 سال پرانی یہ پینٹنگ دنیا کا شاہکار اور نایاب ترین فن پارہ ہے
جس کی شہرت اس کی چوری کے بعد سے دنیا کے ہر کونے میں پھیل گئی ۔
لیونارڈو نے اس پینٹنگ میں ایک اطالوی لیڈی لیزا گرڈینیLisa Gherardini کو پینٹ کیا ہے۔وہ ایک ریشم کے تاجر کی بیوی تھی اور اس کے رئیس شوہر نے خود لیونارڈو کو اپنی بیوی کی پوٹریٹ بنانے کو کہا تھا۔یہ بنیادی طور پر ایک آئل پینٹنگ ہے جس کو لکڑی کے کینواس پر بنایا گیا ہے۔ اس کی خوبصورتی اور وجدانی رنگوں کو دیکھ مصور کی مہارت کا پتہ چلتا ہے۔اس کا پس منظر بھی بہت خوبی سے پینٹ کیا گیا ہے جس میں پہاڑی وادیوں کو ایک عجیب انداز سے رنگا گیا ہے۔اس پینٹنگ کی سب سے خاص بات اس کی پراسرار مسکراہٹ اور آنکھیں ہیں۔کچھ لوگوں کا کہنا ہے کہ ان کو مونا لیزا کی آنکھیں اپنا تعاقب کرتی نظر آتیں ہیں چاہے وہ جس طرف مرضی کھڑے ہو جائیں۔ہر دیکھنے والا یہی سمجھتا ہے کی پینٹنگ کی آنکھیں اسی کو دیکھ رہی ہیں۔ مونا لیزا کی ہنسی بھی اک راز ہے۔کچھ لوگ کہتے ہیں یہ اداسی کی علامت ہے جبکہ کچھ کا کہنا ہے کہ یہ واقعتاً ایک مسکراہٹ ہے لیکن کوئی بڑا آرٹسٹ یقین سے نہیں کہہ سکا کہ مونا لیزا پینٹنگ میں مسکرا رہی ہے یا رنجیدہ ہے۔مونا لیزا مغربی Renaissance کے دور کی پینٹنگ ہے۔اس دور میں عورت ایک تقدیس کی علامت تھی آپ دیکھ سکتے ہیں مونا لیزا کا حلیہ ایک طرح کا با حیا منظر پیش کرتا ہے اور پینٹنگ مریم (سلام الله عليها) کے ان مجسموں اور تصویروں سے بڑی حد تک مشابہت رکھتی ہے جو ہمیں گرجا گھروں اور کنیسوں میں نظر آتی ہیں۔لیونارڈو نے نسوانیت کی ایک شاہکار جھلک اس پینٹنگ میں پیش کی ہے جو اس دور کے مذہبی رجحان کی بھی نمائندہ ہے۔
بات ہو رہی تھی مونا لیزا کی آنکھوں کی؛ تو کہا جاتا ہے جب مصور ان کو پینٹ کر رہا تھا تو اس نے موسیقاروں کی ایک ٹولی کو ساز بجانے میں لگا دیا اور ان دھنوں میں سرشار؛ وجد میں شرابور مونا لیزا کی آنکھوں کو پینٹ کرتا رہا۔لیونارڈو کی شخصیت ہمہ جہت تھی وہ مصوری،مجسمہ سازی،سنگ تراشی،فلسفہ،سائنس اور تاریخ کے علاوہ آرٹ کے بہت سے فنون میں ماہر تھا۔وہ اپنے وقت کا سب سے بڑا انجینئر تھا۔مونا لیزا کی آنکھوں کو پینٹ کرتے وقت اس نے نہ صرف بصری سائنس optical science کو مد نظر رکھا ہے بلکہ انسانی نفسیات کا گہرا مطالعہ بھی اپنے پیش نظر رکھا ہے۔حیرت کی بات یہ کہ اس نے مونا لیزا کی آنکھوں کو بھنووں اور پلکوں کے بغیر پینٹ کیا ہے۔بھنووں کے بارے میں تو کہا جا سکتا ہے کی شاید امیر زادیاں اس دور میں ان کو کٹواتی ہوں لیکن پلکوں کا نہ ہونا لیونارڈو کی گہری سائنسی تکنیک کا مظہر ہے ۔ان چیزوں سے اس نے مونا لیزا کی آنکھوں کو اپنے دیکنے والوں کے لیے زندہ بنا دیا ہے۔پیٹر موس Peter Moss اپنی کتاب History of world میں مونا لیزا کی تعریف ان الفاظ میں کرتا ہے:
"آپ مونا لیزا کے چہرے پر نظریں دوڑائیں؛ آپ دیکھنا کے کس طرح اس کی آنکھیں آپ کا تعاقب کرتی ہیں"
ہالینڈ کے مشہور مصور ونسٹ وان گو Vincent van gogh
نے کہا تھا کہ وہ لوگوں کی آنکھیں پینٹ کرتا ہے لیکن حقیقی بات ہے کی جس طرح لیونارڈو نے مونا لیزا کی آنکھوں کو پینٹ کیا ہے اس طرح وان گو تو کیا کوئی دوسرا مصور بھی ایسا نہیں کر سکا ۔اگر لیونارڈو کے دوسرے کارنامے نہ بھی ہوتے تو اکیلی زندہ آنکھوں والی مونا لیزا ہی اس عظیم باریش مصور کا نام زندہ رکھنے کیلیے کافی ہوتی۔

~ معجزہء فن کی ہے خون جگر سے نمود

: #حنظله_خليق

????:
.بائیں: مونا لیزا کی اصل پینٹگ کا فوٹو

(1۔دائیں: فرانس کے میوزیم میں کڑی حفاظت میں رکھی پینٹنگ جہاں ہر نمائشی کو صرف 30 سیکنڈ کھڑے ہوکر دیکھنے کی اجازت ہے۔
2۔دائیں:لیونارڈو ڈا ونسی Leonardo da Vinci)

— with Hafiz Zubair.



بشکریہ
https://www.facebook.com/groups/1876886402541884/permalink/2801346093429239

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

جواب چھوڑیں

Hey there!

Forgot password?

Forgot your password?

Enter your account data and we will send you a link to reset your password.

Your password reset link appears to be invalid or expired.

Close
of

Processing files…

Situs sbobet resmi terpercaya. Daftar situs slot online gacor resmi terbaik. Agen situs judi bola resmi terpercaya. Situs idn poker online resmi. Agen situs idn poker online resmi terpercaya. Situs idn poker terpercaya.

situs idn poker terbesar di Indonesia.

List website idn poker terbaik.

Situs slot terbaru terpercaya

slot hoki terpercaya

slot online gacor Situs IDN Poker Terpercaya slot hoki rtp slot gacor slot deposit pulsa
Bergabung di Probola situs judi bola terbesar dengan pasaran terlengkap bergabunglah bersama juarabola situs judi bola resmi dan terpercaya hanya di idn poker terpercaya 2022 daftar sekarng di agen situs slot online paling baik se indonesia
trading binomo bersama https://binomologin.co.id/ daftar dan login di web asli binomo