لاہور کی ادبی تقریبات کا احوال

کراچی کے وجیہہ ثانی کی کتاب کی رونمائی ، الحمراء لاہور میں

کراچی کے نواجوان شاعر اور جیوٹی وی کے اینکر پرسن وجیہہ ثانی کے پہلے شعری مجموعہ ’’محبت راستے میں ہے ‘‘ کی تقریب رونمائی 5مئی 2016ء کو الحمراء لاہور میں ہوئی ۔ الحمراء ادبی بیٹھک میں مرمت کے کام کی وجہ سے یہ تقریب شمالی کیٹین کے سامنے واقع تہہ خانے کے اس ہال میں کرنا پڑی جہاں ’’پُتلی تماشہ ‘‘ ہوتا ہے ۔ صدارت امجد اسلام امجد کو کرنا تھی مگر ان کے نہ آپانے کے سبب ڈاکٹر اجمل نیازی نے کی ۔ مہمان ِخصوصی نامور صحافی خاور نعیم ہاشمی ، حمیدہ شاہین اور سعود عثمانی تھے ۔ اظہار خیال کرنے والوں میں میرانِ محفل کے علاوہ علی زریون ، زاہد حسن ،سعید عاصم ،محمد جاوید ، سید حسنین محسن اور وقاص عزیز شامل تھے ۔ ’’اردو ادبی فورم ‘‘ کے زیر اہتمام منعقدہ اس تقریب کی نظامت آغر ندیم سحر نے کی ۔ نمایاں شرکاء میں ڈاکٹر کنول فیروز ، تیمور حسن تیمور، ممتاز راشد ؔ لاہوری ، نجمہ شاہین، محمد شعیب مرزا ، احمد حسن زیدی ، جویریہ کاوش ایڈووکیٹ ، محمد عمیرمرزا (محقق)، احتشام بلوچ اور دیگر کئی شامل تھے ۔ استقبالیہ کلمات آفتاب ساحر نے پیش کیے۔ ’’اردو ادبی فورم ‘‘چند ماہ قبل اور یئنٹل کالج پنجاب یونیورسٹی کے دوستوں نے قائم کیا تھا ۔ پہلی تقریب الحمراء ادبی بیٹھک میں ہوئی ۔ دوسری تیمور حسن کی کتاب’’تیرا کیا بنا ‘‘ کی تقر یب رونمائی تھی اور تیسری مذکورہ بالا تقریب ، اس فورم میں تیمور حسن تیمور ، ظہیر کاشر ، محمد ضمیر ، آغر ندیم سحر (جنرل سیکرٹری )، آفتاب ساحر اور پروفیسر ہارون شامل ہیں۔
وجیہہ ثانی نے اپنے اظہار خیال میں سب منتظمین اور شرکاء کا شکریہ ادا کیا اور منتخب کلام سنایا ان کے دو اشعار نذر قارئین ہیں:
مجھ میں شاعر تو مر گیا کب کا

اب مرے خواب ہیں لگے مرنے

پہلے شاپنگ مال نہیں تھا

یاں میرا اسکول رہا ہے

ادارۃ الافکار کاٹی ہائوس میں مشاعرہ

فعال ادبی تنظیم ’’ادارہ الافکار‘‘ کا ماہانہ مشاعرہ پانچ مئی 2016ء کو پاک ٹی ہائوس لاہور میں ہوا ۔ صدارت : گلزار بخاری ، مہمانان خاص: ڈاکٹر ایوب ندیم، سعید پرویز(کراچی )، ناصر بشیر ، عرفان صادق ، ریاض رومانی ، نظامت: انیس احمد ، استقبالیہ کلمات : بانی و صدر ادارہ ، خلیل فاروقی، میرانِ محفل کے علاوہ کلام سنانے والے شعراء : واجد امیر، ممتاز راشد ؔ لاہوری ، ڈاکٹر پروفیسر عاشق رحیل ، عدل منہاس لہوری، احمد سبحانی آکاش ، لطاف ضامن چیمہ ، ریاض ندیم نیازی(سبّی )، ضمیر حیدر ، سعید عاصی ، نثار باجوہ ، نجمہ شاہین، زاہد بخاری (ترنم سے )، نیازت علی نیاز، ندیم شیخ ، افضل پارس، آفتاب خان، عطاء العزیز، ڈاکٹر دانش عزیز، کامران ناشط، غلام یسین، میجر (ر) خالد نصر ، فراست بخاری ، سعود رومانی ، عدیل مرتضیٰ اورناظم مشاعرہ انیس ، احمد نمایاں شرکاء میں وقاص عزیز اورکیپٹن (ر) ضماد گریوال شامل تھے ۔

’’ادارہ خیال و فن ‘‘ کی نذیر قیصر کے اعزاز میں شام

اردو اور پنجابی زبان کے نامور شاعر نذیر قیصر کے اعزز میں ’’ادارہ خیال و فن ‘‘لاہور نے 8اپریل 2016ء کو اکادمی ادبیات لاہور مرکز میں اعزازی تقریب منعقد کی۔ صدرات صوفی انداز کی چار کتب کے خالق سعید جمال نے کی۔ (ان کے ایک مجموعے کی رونمائی سترہ اپریل 2016ء کو رائل پام کلب لاہور میں ہوئی )۔ نذیر قیصر کے فن و شخصیت کے حوالے سے مفصل اظہار خیال کرنے والوں میں اعتبار ساجد ، بیاء جی ، انیس احمد ، تجدید قیصر، محمد جمیل اور صدر ادارہ خیال و فن ممتاز راشد ؔلاہوری شامل تھے جنہوں نے نظامت بھی کی ۔ نذیر قیصر نے اُن کا اور سب شرکاء کا شکریہ ادا کیا اور اپنا ڈھیروں کلام سنایا۔
گفتگو ادبی فورم کی ٹی ہائوس میں تقریب بہ اعزاز ، امداد آکاش
میاں انیس احمد کی سربراہی میں قائم گفتگو ادبی فورم نے اپنا دوسرا پروگرام 30 ۔ اپریل 2016ء کو پاک ٹی ہائوس لاہور میں منعقد کیا ۔ صدرات نامور شاعر و اجدامیر نے کی۔ مہمانِ خاص حسن عباسی تھے ۔ نظامت مدیر اعلیٰ ــ’’خیال و فن ‘‘ ممتاز راشد ؔلاہوری نے کی ۔ یہ پروگرام اسلام آباد سے آئے ہوئے شاعر امداد آکاش کے اعزاز میں تھا۔ انکے بارے میں اظہار خیال کرنے والوں میں کراچی کے خالد معین کے علاوہ اسلام عظمی ، قمر فاطمہ ، انیس احمد آفتاب خان ، محمد آصف لہوری ، وحید احمد ناز، زاہد محمودشمس اور محمدابصار شامل تھے ۔ ساتھ ساتھ چلتے ہوئے شعری دور میں یہ شعراء کلام بھی سناتے رہے ۔ استقبالیہ کلمات انیس احمد نے ادا کیے تھے ۔ امداد آکاش اور صدر تقریب سے کئی غزلیں سنی گئیں۔ اختتام اس فورم کی طرف سے دیے گئے ظہرانے پر ہوا۔

ادارہ ٔخیال و فن لاہور کی شامِ شفیق سلیمی

نامور شاعرشفیق سلیمی کا ادبی سفر چھ عشروں پر محیط ہے ۔ وہ ربع صدی تک دوبئی وغیرہ میں بھی رہے۔ ادارہ ٔخیال و فن لاہور کے زیر اہتمام 15۔اپریل 2016ء کو ان کے ساتھ اکادمی ادیبات لاہور میں شام منائی گئی ۔صدارت صاحب اسلوب شاعر خالد شریف (مدیر ’’ماورا‘‘) نے کی ۔ مہمان ِخصوصی عالمی شہرت یافتہ مصور ، خطاط ، ادیب و شاعر ور دانشور اسلم کمال تھے ۔ نظامت کے فرائض صدر ادارۂ خیال و فن ممتاز راشدؔ لاہوری نے اد اکیے اور صاحب شام کا تعارف بھی پیش کیا ۔ تلاوت قرآن کی سعادت مفتی امیر علی صابری کے حصے میں آئی ۔ استقبالیہ کلمات بزرگ ادیب اور کالم نگار منشا قاضی نے پیش کیے ۔ شفیق سلیمی کے فن و شخصیت کے بارے میں اظہار خیال کرنے والوں میں شاہد شیدائی (مدیر ’’کاغذی پیرہن ‘‘)، نال نگار اسلام عظمی ، ناول نگار ظہیر بدر ، ادیب و خطیب سید احمد حسن زیدی اور محمد جمیل شامل تھے ۔ شعرائے کرام میں سے توقیر احمد شریفی ، ریاض رومانی، انیس احمد اور عقیل اختر نے اظہار خیال کیا ۔ نگہت اکرم نے شفیق سلیمی کو پھول پیش کیے۔ ممتاز راشد ؔلاہوری نے انھیں اپنی کلیات اور سید فہیم الدین کی کتاب ’’لفظ در لفظ ‘‘کا تحفہ دیا۔ توقیر احمد شریفی نے بھی انھیں اپنا شعری مجموعہ دیا ۔ ادارہ ٔخیال و فن کیطرف سے انھیں صدر محفل کے ہاتھوں گلدستہ پیش کیا گیا۔ تحریک نفاذ اردو کی قمر فاطمہ نے اپنے اظہار خیال میں اُن کی شاعری کو سراہااور نفاذ اردو کے لیے سپریم کورٹ کے احکام پر عمل کرنے پر زور دیا ۔ فراست بخاری نے فی البدیہہ قطعے میں اپنے جذبات بیان کیے ۔ شاہد شیدائی نے شفیق سلیمی کی ایک غزل کا تجزیہ کیا ، اعجاز رضوی نے عمدہ خاکہ پڑھا۔مہمان ِخاص اسلم کمال نے شفیق سلیمی کو با کمال اور صدر محفل خالد شریف نے انھیں اپنے عہد کا حقیقی نما ئندہ شاعر قرار دیا۔ شفیق سلیمی نے اپنے مختصر اظہار خیال میں اکادمی ادبیات اور ادارہ ٔخیال و فن کا اس عزت افزائی پر دلی شکریہ ادا کیا اور اپنی تین منتخب غزلیں سنا کر خوب داد سمیٹی ۔ اکادمی کے محمد جمیل نے تمام شرکاء کا شکریہ ادا کیا ۔ نمایاں حاضرین میں آغاارشد ، نسیم فضل نسیم، اعجاز منظور عادل، ڈاکٹر عمرانہ مشتاق، ڈاکٹر دانش عزیز، اظہر حسین، اعجاز رانا، ریاض ہانس، عدنان خالد اور رضوان رانا شامل تھے۔

پنجابی ادبی سنگت لاہور کی نشستیں

پنجابی ادبی سنگت کی سر گرمیاں لگاتار جاری ہیں ۔ ایس ۔ایم ۔ ایس کے ذریعے ان کا سدّ ا سیکرٹری ڈاکٹر عباد نبیل شاد اور نائب سیکرٹری انجم نواز سو مرود کی طرف سے آتا رہا : یہ ہفتہ وار اکٹھ چوپال کیفے (ناصر باغ) لاہور میں ہوتے رہے ۔۔۔مثلاً۔۔۔۔
یکم اپریل2016:۔ پر دھانگی : پروفیسر عاشق رحیل، کہانی : صابر علی صابر ، شاعری:نجمہ شاہین
پندرہ اپریل: پردھا نگی ، پروفیسر رمضان شاکر، اچیچے پروہنے : اختر ہاشمی ، جے ٹیک سنگھ اننت،
29اپریل: پردھا نگی : پروفیسر ہارون عدیم ، کہانی افتخاربیگ ، شاعری :حسین شمس وغیرہ وغیرہ

’’راستی ‘‘اور ’’ادارہ ٔخیال و فن ‘‘لاہور کی شام ِصوفیہ بیدا ر

نامور ادیبہ اور شاعرہ صوفیہ بیدار کے پنجابی کالموں کے انتخاب ’’سَت گُر‘‘کی تقریب رونمائی 9مئی2016ء کو ادارہ ٔ خیال و فن لاہور اور عالمی فلاحی ادبی ثقافتی تنظیم ’’راستی انٹرنیشنل ‘‘ کے زیر اہتمام اکادمی ادبیات لاہور میں منعقد ہوئی ۔ صدارت: ڈاکٹر اجمل نیازی، مہمانِ خاص: ڈاکٹر اختر شمار، رخسانہ نور، پروفیسر مسرت کلانچوی ، نظامت کے فرائض پہلے دور میں صدر ادارہ ٔخیال و فن ممتاز راشد ؔلاہوری اور دوسرے دور میں ’’راستی ‘‘ کی چیئر پرسن نیلما ناہید درانی نے ادا کیے ۔ صوفیہ بیدار اور ’’ست گُر ‘‘کے بارے میں اظہار خیال کرنے والوں میں میرانِ محفل کے علاوہ حمیدہ شاہین ،اعتبار ساجد، جمیل پال، منشا قاضی، زاہد حسن، محمد مکرم خاں (کالم نگار)، اعجاز اللہ ناز ، سید احمد حسن زیدی، انیس احمد ،شبیر حسن، شہزادہ کبیر احمد ، فراست بخاری ، محمد جمیل اور صوفیہ بیدار کے چھوٹے بھائی یاسر(کالم نگار، براڈ کاسٹر) شامل تھے ۔ صدر محفل نے صوفیہ کی اردو اور پنجابی کاوشوں کی بے حد تحسین کی۔ صوفیہ نے اپنے ادبی سفر کا پس منظر بیان کیا اور اس تقریب کے لیے نیلما ناہید درانی، ممتاز راشد ؔاور اکادمی کے محمد جمیل کا شکریہ ادا کیا ۔
تقریب میں ادارہ ٔخیال و فن کی طرف سے ممتاز راشد ؔلاہوری نے صوفیہ بیدار کو گلدستہ پیش کیا ۔ ایک گلدستہ کیپٹن ضماد گریوال نے پیش کیا ۔ فراست بخاری نے انھیںمالا پہنائی ور نجمہ شاہین نے تحفہ دیا ۔ آغاز میں مفتی امیر علی صابری نے تلاوت کلام پاک کی تھی اور صفیہ صابر ی نے ترنم سے کلام اقبال ؔسنایا تھا ۔
ڈاکٹر اختر شمار ، حمید ہ شاہین ، زاہد حسن اور شبیر حسن نے اپنے تحریری پنجابی مضمون پڑھے ۔ کتاب کے ناشر جمیل احمد پال، اعجاز اللہ ناز، انیس احمد اور محمد مکرم خان نے پنجابی زبان میں اظہار خیال کیا ۔ پروفیسر مسرت کلانچومی نے اپنا سرائیکی مضمون پڑھا۔ 350ناولوں کے خالق مینا ناز نے بھی مختصراً اظہار کیا ۔ نمایا ں شرکاء تھے: ضیاء الدین لاہوری ، فوزیہ چغتائی ، اشتیاق مرزا، اسلام عظمی ، محمد اکرم نعیم ، یوسف مثالی ، زاہد چاند، آغا ارشد اور رائے عقیل عباس بھٹی ۔ صوفیہ بیدار پہلے صوفیہ صنم کے نام سے لکھتی تھیں ۔ ٹی وی انائونسر بھی رہیں ۔ اِن کے پنجابی کالم ’’ترنجن ‘‘ اور اردو کالم ’’چبھن‘‘ کے عنوان سے آتے رہے ۔ ان کے شعری مجموعوں ’’خاموشیاں ‘‘اور ’’تاراج‘‘ کے علاوہ ان کی تصوف کی کتاب ’’غلام فرید سے بابا فرید تک ‘‘ شائع ہو چکی ہے۔ وہ لاہور آرٹس کونسل میں آفیسر بھی ہیں ۔

[ads1][ads2]

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

جواب چھوڑیں

Hey there!

Forgot password?

Forgot your password?

Enter your account data and we will send you a link to reset your password.

Your password reset link appears to be invalid or expired.

Close
of

Processing files…

Situs sbobet resmi terpercaya. Daftar situs slot online gacor resmi terbaik. Agen situs judi bola resmi terpercaya. Situs idn poker online resmi. Agen situs idn poker online resmi terpercaya. Situs idn poker terpercaya.

situs idn poker terbesar di Indonesia.

List website idn poker terbaik.

Situs slot terbaru terpercaya

slot hoki terpercaya

Bergabung di Probola situs judi bola terbesar dengan pasaran terlengkap bergabunglah bersama juarabola situs judi bola resmi dan terpercaya hanya di idn poker terpercaya 2022 daftar sekarng di agen situs slot online paling baik se indonesia
trading binomo bersama https://binomologin.co.id/ daftar dan login di web asli binomo