اٹلی کے مشہور ادیب: اتالو کلوِینو (Italo Calvino)…

[ad_1] اٹلی کے مشہور ادیب: اتالو کلوِینو (Italo Calvino)
* * * ایک تعارف * * *

نجم الدّین احمد

اتالو کلوِینو ۱۹۲۳ء میں کیوبا کے شہر ہَوانا کے مضافاتی علاقے سینتیاگو ڈی ویگاس میں پیدا ہُوے۔ اُن کے والد ماریو کلوِینو، جو استوائی زراعت دان اور ماہرِ نباتات تھے، زراعت اور پھُول بانی کی تعلیم بھی دیا کرتے تھے۔ ماریو کلِوینو نے سان ریمو، اٹلی سے میکسیکو ہجرت کی جہاں اُنھیں وزارتِ زراعت میں اہم عہدہ مل گیا۔ میکسیکو کے انقلاب سے گذرنے کے بعد ماریو سائنسی تجربات کی غرض سے کیوبا آ گئے۔ اتالو کلوِینو کی والدہ ایوا امامیلی بھی ماہرِ نباتات اور یونیورسٹی کی پروفیسر تھیں۔ ۱۹۲۵ء میں جب کہ اتالو کلوِینو کو ابھی پیدا ہُوئے دو برس بھی نہیں ہُوئے تھے وہ لوگ اٹلی لوٹ آئے اور اُنھوں نے سان ریمو کے ساحلی علاقے میں رہائش اختیار کی۔ پھُولوں کے بیچ رہنے کی وجہ سے اتالو کلوِینو کے ابتدائی افسانوںمثلاً The Baron in the Trees میںجا بہ جا پھُول ہیں۔

اتالو کلوِینو نے سینٹ جارج کالج کے انگلش نرسری سکول سے تعلیم کا آغاز کیا۔ ازاں بعد وہ پروٹسٹنٹ ایلیمنٹری پرائیویٹ سکول میں داخل ہُوے جسے وَالدینی۱؎ چلاتے تھے۔ اُنھوں نے اپنی ثانوی تعلیم Liceo Gian Domenico Cassiniسے مکمل کی جہاں اُن کے والدین کی درخواست پر اُنھیں مذہبی تعلیم سے مستثنٰی قرار دیا گیا۔ ۱۹۴۱ء میں وہ زراعت کے مضمون لے کر یونیورسٹی آف ٹیورِن میں داخل ہُوے۔ اپنی ادبی خواہشات کو دبا کر اُنھوں نے اپنے گھر والوں کو خوش کرنے کی غرض سے پہلے ہی سال میں چار امتحان پاس کر لیے۔ ۱۹۴۳ء میں وہ یونیورسٹی آف فلورنس چلے گئے جہاں سے اُنھوں نے قدرے دقّت کے ساتھ زراعت کے تین اور امتحان پاس کیے۔ بیس برس کی عمر میں اُنھوں نے اپنے آپ کو پوشیدہ رکھ کر ملٹری سروس سے بچایا۔ بہار ۱۹۴۴ء میں ایوا نے اپنے بیٹوں کو اطالوی جدّوجہد میں شمولیّت پر حوصلہ افزائی کی۔ جنگی نام ’’سینتیاگو‘‘ اپنا کر کلوِینو نے شمولیّت اختیار کی اور ۱۹۴۵ء تک بیس ماہ تک اُنھوں نے جنگی صعوبتیں برداشت کیں۔ فوج میں جبری بھرتی سے انکار پر طویل عرصے کے لیے اُن کے والدین کو وِلا میری ڈیانا میں یرغمال بنا لیا گیا۔

۱۹۴۵ء میں طویل کشمکش کے بعد کہ وہ ٹیورِن میں رہیں یا مِلان میں، اتالو کلوِینو ٹیورِن میں اقامت پذیر ہو گئے۔ ایک سال بعد اُنھیں ایلیو وِٹورنی (Elio Vittorini) نے ادبی دنیا میں آنے کی دعوت دی اور اور اُن کی مختصر کہانی Andato al Commando(1945: Gone to Headquarters) کو یونیورسٹی سے نکلنے والے ٹیورِن کے ہفتہ وار میگزین Il Politecnico میں شائع کیا۔ جنگ کی خوف ناکی نے نہ صرف اُن کی ادبی خواہشات کو خام مواد فراہم کیا بَل کہ کمیونسٹ کاز کے لیے اُس میں مزید مضبوطی پیدا کی۔ ۱۹۴۷ء میں اُنھوںنے جوزف کونارڈ پر ماسٹر کے مقالے کے ساتھ گریجوایشن کی، فارغ اوقات میں کہانیاں لکھیں اور گولیو آئینوڈی (Gaullio Einaudi) کے طباعتی ادارے آئینوڈی پبلشنگ ہاؤس کے شعبہ پبلسٹی میں ملازمت بھی کی۔ اُن کا بائیں بازو کے دُوسرے ادیبوں کے ساتھ ساتھ سیزر پیویس، نتالیا گنز برگ اور نَوربرٹو بوبیو سے رابطہ رہا۔

اتالو کلوِینو کے پہلے ناول Il Sentiero Dei Nidi Ragno (The Path to the Nest of Spiders)نے، جس میں پیویس (Pavese) کا دیباچہ بھی شامل تھا، ۱۹۴۷ء میں شائع ہو کر Premio Riccione کا انعام جیتا۔ بعد از جنگ اٹلی میں پانچ ہزار نسخوں کی فروخت حیران کُن کامیابی تھی۔ ۱۹۴۸ء میں اُنھوں نے اپنی مثالی ادبی شخصیت ارنسٹ ہیمنگوے کا انٹرویو کیا اور نتالیا گنز برگ کے ساتھ سٹریسا میں واقع اُن کے گھر تک کا سفر کیا۔

۱۹۴۹ء میں اتالو کلوِینو کی کہانیوں کا مجموعہ Ultimo Viene il Corvo (The Crow comes Last)شائع ہُوا جو زمانۂ جنگ کے تجربات پر مبنی تھا۔ ۱۹۵۰ء میں وہ واپس آئینوڈی لوٹ آئے۔ اُنھوں نے l’Unita کے نمائندے کی حیثیت سے دو ماہ رُوس میں بسر کیے۔ ۲۵اکتوبر کو ماسکو میں اُنھیں اپنے والد کی وفات کی خبر ملی۔ اِس سفر سے اُنھوں نے جو مضامین اور مراسلات تحریر کیے وہ ۱۹۵۲ء میں شائع ہُوئے اور اُنھوں نے صحافت کا سینٹ وِنسینٹ پرائز حاصل کیا۔
سات برس سے زائد کے عرصے میں اتالو کلوِینو نے تین رئیلسٹ ناول تحریر کیے: سفید schooner (۴۹۔۱۹۴۷)، ٹیورِن میں نوجوانی (۵۱۔۱۹۵۰ئ) اور ملکہ کا ہار (۵۴۔۱۹۵۲ئ)۔ لیکن تینوں ناکام قرار پائے۔ نتیجتاً جولائی تا ستمبر ۱۹۵۱ء میں صرف تیس دِنوں میں ناول Il Visconte Dmezzato (1952: The Cloven Viscount) تحریر کیا۔ اُنھوں نے دو برس تک پورے اٹلی سے انیسویں صدی کی داستانیں اکٹھّی کیں اور اُن میں سے 200 بہترین داستانیں مختلف لہجوں سے اطالوی زبان میں منتقل کیں۔ ۱۹۵۲ء میں کلوِینو نے پارٹی کے ہیڈ آفس کے نام پر شائع ہونے والے میگزین Botteghe Oscureکے لیے Giorgio Bassaniلکھی۔ اُنھوں نے مارکسٹوں کے ہفتہ وارContemporanco II کے لیے بھی کام کیا۔

۵۸۔۱۹۵۵ء کے دوران اُن کا اپنے سے بڑی عمر کی شادی شدہ اداکارہ ایلسا ڈی جیارجی سے معاشقہ چلتا رہا۔ کلوِینو نے اُسے سینکڑوں خطوط لکھے جن کے اقتباسات کو اطالوی اخبار کوریئیر ڈیلا سیرا نے ۲۰۰۴ء میں شائع کر کے ایک تنازعہ کھڑا کر دیا۔

رُوس کے ہنگری پر حملے سے غلط فہمی پیدا ہونے پر اتالو کلوِینو نے اطالوی کمیونسٹ پارٹی سے استعفیٰ دے دیا۔ ۱۹۵۹ء میں اُنھیں امریکا کے دورے کی اجازت ملی تو اُنھوں نے ۶۰۔۱۹۵۹ء میں چھے ماہ کے لیے امریکا میں قیام کیا جن میں سے چار ماہ اُنھوں نے نیویارک میں گُزارے۔ ۱۹۶۲ء میں کلوِینو ارجنٹائنی مترجم ایستھر جوڈتھ سنگر (چی چیتا) سے ملا اور اُس نے ہَوانا کے ایک دورے کے دوران اُس سے شادی کر لی۔ ۱۹۶۶ء میں وِٹورنی کی موت نے اُسے خاصا متأثر کیا۔ ۱۹۶۷ء میں وہ پیرس گئے جہاں اُنھوں نے ریمنڈ کیونیو کی دعوت پر تجرباتی مصنفین کے گروپ OuLiPo (Ouvroir de Litterature Potentielle) میں شمولیت اختیار کی۔ کلوِینو کے ادبی دنیا سے بہت زیادہ رابطے تھے۔ اُنھوں نے پلے بوائے کے اطالوی ایڈیشن (۱۹۷۳ئ) کے لیے ناول لکھے۔ وہ اطالوی اخبار کوریئیر ڈیلا سیرا میں بھی مسلسل لکھتے رہے۔
گرما ۱۹۸۵ء میں اُنھوں نے موسمِ سرما میں ہاورڈ یونیورسٹی میں لیکچرز دینے کے لیے کچھ نوٹس تیار کیے لیکن ۶ستمبر کو اُسے سینا کے قدیمی ہسپتال سانتا ماریا ڈیلا سکالا میں داخل ہونا پڑا جہاں وہ دماغ کی شریان پھٹ جانے کے باعث ۱۸ ۔۱۹ ستمبر ۱۹۸۵ء کی درمیانی شب دم توڑ گئے۔ وہ جنگ کے بعد کے اٹلی کا درخشندہ ادیب ہیں۔

———-

۱؎ وَالدینسس (Waldenses) ایک مذہبی فرقہ تھا جسے ۱۱۷۰ء میں لیون (Lyon) فرانس کے ایک امیر تاجر پیٹر والدو نے قائم کیا تھا۔ وَالدو اور اُس کے پیروکار چرچوں کا پُرانی بنیادوں پر، افلاس اور اخلاص پر مبنی احیاء چاہتے تھے۔ اُن کا پوپ الیگزینڈر۔III نے خاتمہ کیا اور اُنھیں سزائیں دیں۔

* * * * *

نوٹ:
اس گروپ “عالمی ادب کے اردو تراجم” میں پوسٹ کیے گئے، اتالو کلوِینو کی تحریریں کو پڑھیے۔

(1) افسانہ نمبر 77: گمشدہ رجمنٹ، مصنف:اٹالو کلوینو ، مترجم: ظفر سیّد
پڑھنے کے لیے لنک:

https://www.facebook.com/groups/AAKUT/permalink/2036640856566437/

(2) افسانہ نمبر 115، مہ زادیاں، تحریر: اٹالو کلوینو ، مترجم: نجم الدین احمد
پڑھنے کے لیے لنک:

https://www.facebook.com/groups/AAKUT/permalink/2117918278438694/

(3) میری تحریریں اور میرا بچپن، تحریر: اٹالو کلوینو، انتخاب و ترجمہ: کشور ناہید
پڑھنے کے لیے لنک:

https://www.facebook.com/groups/AAKUT/permalink/2117377825159406/


بشکریہ

اٹلی کے مشہور ادیب: اتالو کلوِینو (Italo Calvino)* * * ایک مختصر تعارف * * * نجم الدّین احمداتالو کلوِینو ۱۹۲۳ء م…

Posted by Yasir Habib on Friday, February 2, 2018

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

جواب چھوڑیں

Hey there!

Forgot password?

Forgot your password?

Enter your account data and we will send you a link to reset your password.

Your password reset link appears to be invalid or expired.

Close
of

Processing files…

Situs sbobet resmi terpercaya. Daftar situs slot online gacor resmi terbaik. Agen situs judi bola resmi terpercaya. Situs idn poker online resmi. Agen situs idn poker online resmi terpercaya. Situs idn poker terpercaya.

situs idn poker terbesar di Indonesia.

List website idn poker terbaik.

Situs slot terbaru terpercaya

Bergabung di Probola situs judi bola terbesar dengan pasaran terlengkap bergabunglah bersama juarabola situs judi bola resmi dan terpercaya hanya di idn poker terpercaya 2022 daftar sekarng di agen situs slot online paling baik se indonesia
trading binomo bersama https://binomologin.co.id/ daftar dan login di web asli binomo