کشمیر اور گِلگِت چِترال میں پہاڑوں پر برف پڑتی ہے …

[ad_1] کشمیر اور گِلگِت چِترال میں پہاڑوں پر برف پڑتی ہے ۔ اور ہزاروں ہی پہاڑ ہیں ۔ پِھر ہر پہاڑ پر صِرف چوٹی پر ہی نہیں ، اُسکی ڈھلانوں پر بھی جہاں برف کو جگہ مِلتی ہے ، برف وہاں گِر جاتی ہے ۔ اپریل کے آخِر تک یہ برف تہہ بہ تہہ جم کر گلیشیئر کا رُوپ دھار لیتی ہے ۔ پِھر گرمی پڑتے ہی پگھلنے لگتی ہے ۔

ہر ہر پہاڑ سے کئی چھوٹے چھوٹے جھرنے ڈھلوان کی جانِب رُو نہ سَفَر ہو جاتے ہیں ۔ چھوٹے جھرنے بڑے جھرنوں میں مدغم ہو جاتے ہیں ۔ اور اِسی طرح بے شُمار بڑے جھرنے مِل کر دریا بناتے ہیں ۔

چِلاس کے پہاڑوں سے مَشرِق میں وادیِ نیلم میں شُمال کی طَرَف آخری گاؤں ” گھموٹ کُنڈی ہے ۔ وہاں سے آگے بس برف ہی نَظَر آتی ہے ۔ اُس جگہ سے ایک تُند پہاڑی چشمہ شاردہ کے مقام پر دریائے نیلم میں گِرتا ہے ۔ چشمے کا شَفّاف پانی دریائے نیلم کے پیچھے سے آنے والے گدلے پانی میں مِل کر اپنا وُجُود کھو دیتا ہے ۔

اور دریائے نیلم ، مُظَفَّر آباد کے مقام پر بھارت سے آنے والے دریائے جہلم میں گِر کر اپنا وُجُود کھو دیتا ہے اور ۔ لیکِن اُسکی یہ قُربانی رائیگاں نہیں جاتی ۔ پہلے ایک تھا ، اب دو ہو گئے ۔ یعنی دو دریاؤں کا پانی مِل کر اور زیادہ طاقتور ہو جاتا ہے ۔ اور یہی دریائے جہلم راوَلپِنڈی تک مزید جھرنوں کو خُود میں سَموتا ہُوا جہلم شہر کے پاس سے گُذَرتا ہے تو اِس کی ہیبت دیکھنے والی ہوتی ہے ۔

پِھر یہی دریا چناب میں گِرتا ہے ، اور عَلی پُور کے مقام پر چناب کا پانی سِندھ میں گِرتا ہے تو دریائے سِندھ کا پاٹ میلوں چوڑا ہو جاتا ہے ۔ اور یہ سَمَندَر سا دِکھائی دیتا ہے ۔

یہی مِثال ہے اُردُو کی ۔ جیسے عربی میں ہر ہر قبیلے کا اپنا ذخیرۂِ الفاظ تھا ۔ تو جب عرب ایک مرکزی نظم کے تحت آئے تو اُنکی ایک جامع لُغَت مُرَتَّب ہُوئی ۔ اور صِرف تلوار کیلِئے قریباً باسَٹھ ( 62 ) الفاظ عربی میں مِلتے ہیں ۔ اُسی طرح بَرِّصَغیر کی مُختَلِف مقامی بولِیؤں کو ہِندی نے اپنے اندَر سمویا ، اور اُس پر طُرّہ یہ کہ دیگَر بڑی زبانوں یعنی تُرکی ، فارسی اور عربی کی خُوبِیؤں سے اِس کے خط و خال نِکھرے ۔

اب یہی دیکھیں کہ سن بارہ سو اَٹّھائیس کے قَریب کی ہِندی ( اَمیر خُسرو کی شاعری ) جو اپنی ساخت ، جُملوں کی بُنَت اور آوازوں کے لحاظ سے ہر طرح سے ایک مُکَمَّل زبان تھی ، ہر طرح سے جِلا پاکر دُنیا کی بہترین زبان بن گئی ۔ وُہ یُوں کہ جیسے انگریزی نے لاطینی اور یُونانی سے بِالخَصُوص اور جرمن ، فرانسیسی ، ھسپانوی سے اِستَفادہ کِیا ، اُردُو نے انگریزی کے واسطے سے اُن تمام مَغرِبی زبانوں کی خُوبِیؤں کو بھی خُود میں سمو لِیا ۔

ایک نُقطہ جو برادر جاوید راحت نے اُٹھایا اُسکے جواب میں یہ لمبی تمہید باندھی ہے ۔ کہ فرض کریں کہ ایک پہاڑی جھرنا کِسی بڑے نالے میں گِر کر اپنا وُجُود کھونا نہ چاہے تو وُہ پہاڑوں میں ہی گُھوم گھام کر رہ جائے گا ۔ نہ تو اُس سے کِسی کو فائدہ ( خارجی دُنیا ) ہوگا ، اور نہ ہی وُہ کِسی زمین کو سیراب کر پائے گا ۔ اور چھوٹے جھرنوں کی ہیبت ؟ کِیُونکہ وُہ اپنی ذات میں ہی بِلا کِسی تعامُل کے گُم ہے تو اُسے بھی کِیا مِلا ؟

اِسی طرح اعلیٰ سَطح پر اگر اُردُو یا مقامی زبان کا اگر اِختیار اور سہُولَت بھی مِل گئی تو پاکِستانی قوم اُن خُود مُختار اور آزاد پہاڑی جھرنوں کی مِثال بن کر رہ جائیں گے ۔

دوم یہ کہ یہ تجویز اِس وجہ سے بھی ناقابِلِ عَمَل ہے کہ میں بی زی یُو لیّہ کے شُعبہِ انگریزی کا اُستاد ہُوں ۔ اُس کیمپس میں دیگَر شُعبہ جات بھی ہیں ۔ تو اگر نفسیات کے مضمُون میں اگر کوئی طالِبِعِلم اپنی مادری زبان میں پرچے دینا چاہے تو بڑی مُشکِل ہو جائے گی ۔ وُہ یُوں کہ وہاں راجن پُور سے بلوچی بولنے والے طَلَباء بھی آتے ہیں ، لورالائی سے پنجاب پڑھنے کیلِئے آنے والے پشتُون طَلَباء بھی آتے ہیں ۔ سِرایئکی تو اِس عِلاقے کی اکثریتی بولی ہے ، پِھر پنجابی اور اُردُو بولنے والے بھی خاصی تعداد میں آتے ہیں ۔ تو اب اُستاد آخِر کِتنی زبانوں کا ماہِر ہو ؟ تعلیمی نِظام سیمیسٹر کا ہے ۔ اُستاد نے خُود ہی پڑھانا ، پرچہ بنانا اور طَلَباء کی قابلیت کا جائزہ لینا
assess
کرنا ہے تو وُہ کیسے کرے گا ؟

ایک نُقطہ یہ ہے کہ کِسی اِمام کے مُقتَدِیوں میں سے کِسی ایک یا کئی ایک کو یہ اِختیار دِیا جاسکتا ہے کہ اپنی مرضی کریں ؟ ۔ ۔ ۔ ۔ مَثَلاً اِمام رُکُوع میں جائے تو کوئی مُقتَدی قیام لمبا کر لے ۔ یا اگر اِمام سجدے سے اُٹھ جائے تو کوئی مُقتَدی سجدہ طَویل کر لے ؟

مَضامینِ شِبلی
بشکریہ

کشمیر اور گِلگِت چِترال میں پہاڑوں پر برف پڑتی ہے ۔ اور ہزاروں ہی پہاڑ ہیں ۔ پِھر ہر پہاڑ پر صِرف چوٹی پر ہی نہیں ، اُسک…

Posted by Shahid Paras on Sunday, December 24, 2017

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

جواب چھوڑیں

Hey there!

Forgot password?

Forgot your password?

Enter your account data and we will send you a link to reset your password.

Your password reset link appears to be invalid or expired.

Close
of

Processing files…

Situs sbobet resmi terpercaya. Daftar situs slot online gacor resmi terbaik. Agen situs judi bola resmi terpercaya. Situs idn poker online resmi. Agen situs idn poker online resmi terpercaya. Situs idn poker terpercaya.

situs idn poker terbesar di Indonesia.

List website idn poker terbaik.

Situs slot terbaru terpercaya

slot hoki terpercaya

Bergabung di Probola situs judi bola terbesar dengan pasaran terlengkap bergabunglah bersama juarabola situs judi bola resmi dan terpercaya hanya di idn poker terpercaya 2022 daftar sekarng di agen situs slot online paling baik se indonesia
trading binomo bersama https://binomologin.co.id/ daftar dan login di web asli binomo