قارئین و صاحبانِ فراش کی دکھتی رگ پہ ہاتھ رکھنے والے انور زاہدی صاحب کا انٹرویو

تفکر – آپ کا پورا نام؟
انور زاہدی -سید انور مقصود زاہدی
تفکر – قلمی نام؟
انور زاہدی -انور زاہدی
تفکر – کہاں اور کب پیدا ہوئے؟
انور زاہدی -9 جولائی 1946 میں پیدائش ہوئی۔
تفکر – تعلیمی قابلیت؟
انور زاہدی -پی جی ڈی (نیوڑیشن) ایم ایس سی
(کیمونٹی ہیلتھ اینڈ نیوٹریشن)
تفکر – ابتدائی تعلیم کہاں سے حاصل کی؟
انور زاہدی -کنڈر گارٹن سے ایم بی بی ایس تک ملتان سے
تفکر – اعلی تعلیم کہاں سے حاصل کی؟
انور زاہدی -ایم ایس سی(علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی)
تفکر – پیشہ؟
انور زاہدی -فزیشن اینڈ کنسلٹنٹ نیوٹریشیسنٹ
وزیٹنگ فیکلٹی [برائے ماسٹرز پروگرام ان نیوٹریشن علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی اسلام آباد]

تفکر – ادبی سفر کا آغاز کب ہوا؟
انور زاہدی -کالج میں ایف ایس سی کے دوران لکھنا شروع کیا اور ہمیشہ کالج میگزین کا ایڈیٹر رہا۔
تفکر – آپ نظم یا غزل میں کس سے متاثر ہوئے؟
انور زاہدی -میں شاعر کہانی کار اور مترجم ہوں
تفکر – کسی شاعر یا ادیب کا تلمذ اختیار کیا؟
انور زاہدی – کسی شاعر یاادیب کی شاگردی نہیں کی
تفکر – ادب کی کون سی صنف زیادہ پسند ہے؟
انور زاہدی -ادب کی صنف میں افسانہ نگاری پسند ہے
تفکر – ادب کی کس صنف میں زیادہ کام کیا؟

نثر پہ۔

تفکر – اب تک کتنی تصانیف شائع ہو چکی ہیں؟

انور زاہدی -اب تک 15 کتابیں آچکی ہیں جن میں
شاعری کی 1 کتاب
کہانیوں کی 4 کتابیں
تراجم کی 7 کتابیں
سفرنامہ 1 کتاب
ترتیب و تالیف 1 کتاب
تحقیق و ترجمہ 1 کتاب

کہانیوں کے 4 مجموعے

  • عذاب شھر پناہ 1991
  • موسم جنگ کا کہانی محبت کی 1996
  • مندر والی گلی 2008
  • بائیسکوپ دن 2013

شعری تصانیف

  • دریچوں میں ہوا (جدید ایرانی شاعری کا ترجمہ 1983 دوسرا ایڈیشن 1997
  • بارشوں کا موسم (ہرمن ہیسے 1984)
  • سنہرے دنوں کی شاعری (نظموں کا مجموعہ 1984)
  • لاشعور تک رسائی ( کارل گسٹاو یونگ کے افکار کا ترجمہ 1996)
  • مناس (کرغزستان کی رزمیہ شاعری 1996)
  • یادیں ( چلی کے نوبل انعام یافتہ شاعر پابلو نرودا کی خود نوشت 1996)
  • فرنانڈو پیسوا کی نظمیں( 1997)
  • بازیافت (دنیا کے دس نامور شعرا پر تحقیقی مقالوں کے ساتھ ہر شاعر کی دس نظموں کے تراجم 2004)

تفکر – اپنے خاندان کے حوالے سے کچھ بتائیں؟
انور زاہدی -میرے والد سید مقصود زاہدی ایک خاکہ نگار اور رباعی گو کے حیثیت سے منفرد مقام کے حامل رہے ۔
چھوٹی بہن ماہ طلعت زاہدی ایم اے اردو ہونے کے باعث تدریس سے وابستہ رہیں لیکن بحثیت شاعرہ جانی جاتی ہیں ۔
میری بیگم ایک بیالولجسٹ ہیں اور بیکن ہاؤس میں اے لیول کو پڑھاتی ہیں۔
تفکر – ازدواجی حیثیت؟
انور زاہدی -شادی شدہ۔

تفکر – فیملی ممبرز کے بارے میں بتائیے؟
انور زاہدی -تین بچے ہیں جن میں 2 بیٹے 1 بیٹی۔
بڑا بیٹا شعیب زاہدی کینڈا میں 6 برس سے مقیم ہے اور آئی ٹی کے شعبے سے منسلک ہے اس کی بیوی وہیں برٹش کونسل سے وابستہ ہے ایک بچی ہے جو 7 برس کی ہے۔
بیٹی این سی اے سے گرافنگ ڈیزائنگ کی گریجویٹ ہے اور بحثیت کریٹیو ڈائریکٹر ایک ایڈ فرم میں ہے۔
اس کے 2 بچے ہیں شوہر ایک آرکیٹیکٹ ہے۔
چھوٹا بیٹا ایک سوفٹ وئیر فرم میں پراجیکٹ مینیجر ہے بیوی نسٹ میں آرٹ ٹیچر ہے 1 بچہ حال ہی میں پیدا ہوا ہے۔
تفکر – آج کل کہاں رہائش پذیر ہیں؟
انور زاہدی -اسلام آباد میں رہتے ہوئے کئی دہائیاں گزر گئیں ۔
تفکر – بچپن کی کوئی خوبصورت یاد؟
انور زاہدی -چھوٹی بہن طلعت کی پیدائیش میرے بچپن کی ایک خوبصورت یاد ہے اسوقت میں تیسری یا چوتھی کلاس میں تھا۔
تفکر – ادبی سفر کے دوران میں کوئی خوبصورت واقعہ؟
انور زاہدی -بچپن ہی سے پڑھنے کی طرف رغبت گھر کے ادبی ماحول کی وجہ سے رہی ۔
شوکت تھانوی اور جوش ملیح آبادی سے آٹوگراف حاصل کرنا یادگار واقعات ہیں ۔

تفکر – ادب میں کن سے متاثر ہیں؟

انور زاہدی -افسانے میں اے حمید کرشن چندر۔
شاعری میں ساحر لدھیانوی، ناصر کاظمی، منیر نیازی، احمد فراز
پاکستان ہندوستان کے کم و بیش سارے نمائندہ رسائل میں کہانی اور شاعری شائع ہوئی ۔
تفکر – ادبی گروپ بندیوں اور مخالفت کا سامنا ہوا؟
انور زاہدی -ہمیشہ کام کرنے کو ادب کے لئے فوقیت دی لہذا ادبی گروہ بندی سے تعلق نہیں رکھا ۔
تفکر – ادب کے حوالے سے حکومتی پالیسی سے مطمئن ہیں؟
انور زاہدی – تیسری دنیا کے ملک کی حیثیت سے پاکستان باقی دوسرے ممالک سے مختلف نہیں ۔
جب تک تعلیم کا تناسب نہیں بڑھتا ادب کے بارے کچھ کہنا ایک خوش فہمی ہوگی حکومت ادب کے بارے میں کچھ کرنے سے پہلے ملک کی تعلیمی حالت میں تبدیلی لائے۔
تفکر – اردو ادب سے وابستہ لوگوں کے لئیے کوئی پیغام؟
انور زاہدی -ردو ادب پڑھنے والوں سے یہی کہوں گا کہ مزید پڑھیں اور کتاب خرید کر پڑھنے کا شعار بنائیں یہی اردو ادب کی سب سے بڑی خدمت ہوگی ۔
ادیبوں اور شاعروں سے اپنے مشن کو جاری رکھنے کی تمنا اور دعائیں ۔
تفکر – ہماری اس کاوش پر کچھ کہنا چاہیں گے؟
انور زاہدی -میں اس کاوش پر ڈاکٹر عمرانہ مشتاق کو مبارکباد دینا چاہوں گا کہ وہ اک کار جنوں میں مبتلا ہیں خدا انہیں کامیاب و کامران کرے آمین۔
تفکر – پہچان شعر یا تحریر؟
انور زاہدی -اپنی ایک مختصر نظم “اوس میں بھیگے گلاب ” آپ سب کے لئے حاظر ہے۔

آبلہ پا ہوں
لہو رنگ ہیں میری آنکھیں
گھر مرا دشت میں ہے
خاک مرے بالوں میں
کس طرح تیرے لئے
جان بہاراں لاوں
اوس میں بھیگے گلاب

S N 03

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

جواب چھوڑیں

Hey there!

Forgot password?

Forgot your password?

Enter your account data and we will send you a link to reset your password.

Your password reset link appears to be invalid or expired.

Close
of

Processing files…

Situs sbobet resmi terpercaya. Daftar situs slot online gacor resmi terbaik. Agen situs judi bola resmi terpercaya. Situs idn poker online resmi. Agen situs idn poker online resmi terpercaya. Situs idn poker terpercaya.

situs idn poker terbesar di Indonesia.

List website idn poker terbaik.

Situs slot terbaru terpercaya

Bergabung di Probola situs judi bola terbesar dengan pasaran terlengkap bergabunglah bersama juarabola situs judi bola resmi dan terpercaya hanya di idn poker terpercaya 2022 daftar sekarng di agen situs slot online paling baik se indonesia
trading binomo bersama https://binomologin.co.id/ daftar dan login di web asli binomo