“مدت ہوئی عورت ہوئے” کی شاعرہ ممتازملک کا انٹرویو

“مدت ہوئی عورت ہوئے” کی شاعرہ ممتازملک کا انٹرویو

تفکر – آپ کا پورا نام؟

ممتاز۔۔ممتازملک

تفکر – قلمی نام؟

ممتاز۔۔ممتاز

تفکر – کہاں اور کب پیدا ہوئے؟

ممتاز۔۔22 فروری 1971ء راولپنڈی پاکستان

تفکر -تعلیمی قابلیت؟
ممتاز۔۔بی اے

تفکر – ابتدائی تعلیم کہاں سے حاصل کی؟

ممتاز۔۔گورنمنٹ گرلز ہائی سکول نمبر 2 مری روڈ راولپنڈی (جو اب ہائر سیکنڈری سکول ہو چکا ہے )

تفکر – اعلٰی تعلیم کہاں سے حاصل کی؟

ممتاز۔۔راولپنڈی،پرائیویٹ

تفکر -پیشہ؟ 

ممتاز۔۔ٹیچنگ،کونسلنگ،سوشل ورک،شاعری،کالم نگاری

تفکر –ادبی سفر کاآغاز کب ہوا؟

ممتاز۔۔یہ تو یاد نہیں لیکن اپنی تحریریں باقاعدہ عوامی طور ہر پیش کرنے کا آغاز ہوا 2008 جنوری سے

تفکر – آپ نظم یا غزل میں کس سے متاثر ہوئے؟

ممتاز۔۔ویسے تو مجھے ہر لکھنے والے کا کلام اچھا لگتا ہے اور دوسرے سے منفرد لگتا ہے لیکن منیر نیازی،محسن نقوی،حبیب جالب،فراز میرے پسندیدہ شاعر ہیں

تفکر -کسی شاعر یا ادیب کا تلمذ اختیار کیا؟

ممتاز۔۔میں کسی شاعر کا انداز اختیار کرنے کے بجائے اس بات پر یقین رکھتی ہوں کہ کسی بھی شعر کو پڑھتے ہوئے اگر اسی کے انداز میںں آپ پر بھی اسی لب و لہجے میں اشعار کی آمد شروع ہوتی ہے تو یہ آپ کا فرض ہے کہ اسے پڑھنے والوں کی امانت سمجھ کر اپنے حصے کے طور پر پڑھنے والے کے سامنے پیش کر دیا جائے

تفکر – ادب کی کون سی صنف زیادہ پسند ہے؟

ممتاز۔۔فیصلہ کرنا میرے لیئے مشکل ہے .کسی معاملے کو سنتے ہوئے یا سہتے ہوئے آپ پر کوئی کیفیت اشعار کی صورت اترنے لگتی ہے تو کبھی نثر کی صورت وہ صفحات پر لفظ در لفظ دوڑنے لگتی ہے۔اس کیفیت سے نکلنے کے بعد پتہ چلتا ہے کہ صفحہ قرطاس پر عطا کرنے والے نے کیا بکھیرا ہے آپ کے ہاتھوں۔شعر یا نثر

تفکر -ادب کی کس صنف میں زیادہ کام کیا؟

ممتاز۔۔شاعری،نثر،کہانی سبھی ساتھ ساتھ ہی چل رہی ہیں۔کتابیں دیکھیں تو شاعری پر کام زیادہ نظر آئے گا اور کالمز کی تعداد دیکھیں تو وہ اس سے زیادہ نظر آئیں گے

تفکر -شعری تصانیف کی تعداد اور نام؟

ممتاز۔۔اب تک میرے دو شعری مجموعے چھپ چکے ہیں جن کے نام ہیں
*مدت ہوئی عورت ہوئے (2011ء)
* میرے دل کا قلندر بولے( 2013ء)
سات کتابیں چھپنے کی منتظر ہیں

تفکر -نثری تصانیف کی تعداد اور نام؟

ممتاز۔۔*میرے کالمز کا ایک مجموعہ چھپ چکا ہے۔جس کا نام ہے
*سچ تو یہ ہے ( 2016ء)
جبکہ چار کتابیں ابھی چھپنے کی منتظرہیں

تفکر – اپنے خاندان کے حوالے سے کچھ بتائیں؟

ممتاز۔۔میرے والد قطب شاہی اعوان ملک تھے .ان کا انتقال 1999ء میں ہو گیا تھا۔میری والدہ کا تعلق پختون فیملی سے تھا۔ان کا انتقال 1999ء میں ہو گیا تھا۔میں ایک ہی بہن ہوں۔جبکہ میرے چار بھائی ہیں۔میں بہن بھائیوں میں دوسرے نمبر پر ہوں

تفکر – ازدواجی حیثیت؟

ممتاز۔۔7جنوری 1996 ء میں میری شادی لاہور کی ایک شیخ فیملی میں ہوئی۔الحمداللہ میں اپنے شوہر شیخ محمد اختر صاحب کے ساتھ ایک خوشگوار شادی شدہ زندگی گزار رہی ہوں۔اور بے شک میری تمام کامیابیوں میں میرے شوہر کی حوصلہ افزائی اور ان کے دیے اعتماد اور بھروسے کا بڑا ہاتھ ہے۔جس کے لیے میں ہمیشہ انہیں اس کا کریڈٹ دیتی ہوں

تفکر – فیملی ممبرز کے بارے میں بتائیے؟

ممتاز۔۔میرے ماشاءاللہ تین بچے ہیں۔دو بیٹیاں اور ایک بیٹا،بڑی بیٹی نے ابھی گریجویشن کمپلیٹ کی ہے۔دوسری بیٹی ابھی انٹر کر رہی ہے۔چھوٹا بیٹا نویں جماعت میں ہے

تفکر – آج کل کہاں رہائش پذیر ہیں؟

ممتاز۔۔میں شادی کے بعد 1998 ء سے ہی پیرس فرانس میں مستقل سکونت پذیر ہوں۔میرے بچوں کی پیدائش بھی فرانس میں ہی ہوئی ہے۔سوائے بڑی بیٹی کے،وہ ایک سال کی تھیں جب میں اسے لیکر اپنے شوہر  کے پاس فرانس آئی

تفکر – بچپن کی کوئی خوبصورت یاد؟

ممتاز۔۔کئی باتوں کے حوالے سے ہمارا بچپن بہت خاص رہا۔ہمیں زیادہ گھومتے  پھرنے کی آزادی بالکل نہیں تھی۔نہ ہی سہیلیاں بنانے کیی اجازت تھی۔ہم حقیقا مارشل لاء میں بڑے ہوئے،گھر میں بھی اور ملک میں بھی ?

تفکر – ادبی سفر کے دوران میں کوئی خوبصورت واقعہ؟

ممتاز۔۔ادبی سفر کے دوران میرا ہر پل اور ہر ایونٹ میرے لیے یادگار ہے۔جس کے لیے میں اللہ پاک کی ہر لمحہ شکر گزار ہوں۔میں سب کو عزتت دیتی ہوں اور سبھی نے مجھے بھی عزت سے نوازا ہے۔سب کچھ میری امید سے ہمیشہ ہی بڑھ کر رہا ہے۔الحمداللہ

تفکر – ادب میں کن سے متاثر ہیں؟

ممتاز۔۔ابن صفی،آصف خان،یونس بٹ،مشتاق احمد یوسفی،اشفاق احمد،بانو قدسیہ،عطاء الحق قاسمی اور بھی بہت سے

تفکر – ادبی رسائل سے وابستگی؟

ممتاز۔۔میں ہمیشہ ہی مطالعے شوقین رہی ہوں۔اس لیے مختلف  اخبارات سے وابستگی بھی ہے۔ویسے کتابوں کی دکان یا لائبریری  سے مجھے نکال کر لانا جوئے شیر لانے کے برابر ہے

تفکر – ادبی گروپ بندیوں اور مخالفت کا سامنا ہوا؟

ممتاز۔۔بہت زیادہ،باقاعدہ میرے نام اور فوٹو پر کراس بھی لگائے گئے کچھ محبت کرنے والوں کی طرف سے،لیکن مجھے ہمیشہ ایک بات پر کامل یقین رہا ہے کہ اللہ نے جسے جس کام کے لیے بھیجا ہے وہ اس  سے وہ کام جیسے چاہے کروا بھی لے گا اور منوا بھی لے گا
انشاءاللہ۔اور اس کی ایک مثال میں خود ہوں۔وہ لوگ جو کبھی میری مخالف صف میں خوف بھڑکا کر کھڑے کیے گئے تھے۔آج وہ محبت سے عزت سے میرا ذکر کرتے ہیں تو یقین مانیئے اللہ کے حضور شرم سے نظریں نہیں اٹھا سکتی میں۔بس یہ ہی کہتی ہوں
یہ بڑے کرم کے ہیں فیصلے یہ بڑے نصیب کی بات ہے
جسے چاہے اس کو نواز دے یہ در حبیب کی بات ہے

تفکر – ادب کے حوالے سے حکومتی پالیسی سے مطمئن ہیں؟

ممتاز۔۔جی نہیں،ہم بیرون ملک لکھنے والوں کو حکومت پاکستان نے اپنے کسی باقاعدہ دائرے میں شامل نہیں کیا۔ہم اپنی کتابوں کو کیسے آسانی سے میلوں میں پہنچائیں۔ہمیں اس کی کوئی رہنمائی حاصل نہیں ہے۔ہماری کتابیں سیل کاونٹرز پر کیسے پہنچیں ؟ کچھ علم نہیں۔ہم خود ہی پاکستان جائیں تو جو کچھ سمجھ پاتے ہیں وہ ہی اپنے کام اور پہچان کو سامنے لانے کے لیے کرتے ہیں ورنہ جو نہیں جا سکتے وہ گمنام ہی رہ جاتے ہیں۔اقرباء پروری کی آگ  نے بہت سے لکھاریوں کے کام کی چتائیں جلا دیں

تفکر – اردو ادب سے وابستہ لوگوں کے لئیے کوئی پیغام؟

ممتاز۔۔ویسے تو میں خود کو اس قابل نہیں سمجھتی کہ کسی کو کوئی پیغام دے سکوں،لیکن اگر کوئی مجھے سننا چاہے تو اس سے یہ ہی گزارش ہے کہ اردو ہماری قومی زبان تو ہے ہی لیکن یہ دنیا کی بہت ہی مہذب،خوبصورت اور مترنم زبان ہے۔اس میں کام کرنا ہو تو پلیز اپنی اردو کا لہجہ اور تلفظ سب سے پہلے ٹھیک کیجیئے۔اور خود کو ہر پل اپنی  تصیح کے لیے تیار رکھیں ورنہ آپ کا برا تلفظ اور برا لہجہ آپ کی اردو کی خدمت تو کیا کریگا اس زبان کی بربادی کا سہرا ضرور آپ کے سر ہی بندھے گا

تفکر – ہماری اس کاوش پر کچھ کہنا چاہیں گے؟

ممتاز۔۔لکھنے والوں کے تعارف اور پہچان کو محفوظ کرنے کا یہ سلسلہ بہت ہی خوب صورت اور ضروری ہے۔آپ کی اس کاوش کو میں خراج تحسین پیش کرتی ہوں۔اللہ پاک آپ کو مزید کامیابیوں سے نوازے۔آمین۔تاکہ ہم اپنے آنے والے نوجوانوں کے لیے اپنے کام اور لکھاریوں کی ذاتی معلومات کو محفوظ کر سکیں

تفکر – پہچان شعر یا تحریر؟

ممتاز۔۔میرے پہلی کتاب کی ٹائٹل نظم ہی میری پہچان بنی۔جو پیش خدمت ہے

(مدّت ہوئی عورت ہوئے )

مجھ سے سہیلی نے کہا
ممتاز ایسا لکھتی جا
جس میں ہوں کچھ چوڑیوں
چھنکارکی باتیں
کچھ تزکرے ہوں چنریوِں کے
اِظہار کی باتیں
اُڑتے سنہری آنچلوں میں
موتیوں کی سی لڑی
پہلی وہ شیطانی میری
پہلی وہ جو میری ہنسی
بالی عمر کی دِلکشی
وہ بچپنے کی شوخیاں
خوابوں میں خواہش کے سراب
دھڑکن کی وہ سرگوشیاں
گوٹا کِناری ٹانکتے
اُنگلی میں سوئیوں کی چُبھن
دانتوں میں اُنگلی داب کر
ہوتی شروع پھر سے لگن
پہلی دفعہ دھڑکا تھا کب
یہ دل تجھے کچھ یاد ہے
وہ خوشبوؤں رنگوں کی دنیا
اب بھی کیا آباد ہے

میں نے کہا میری سکھی
دنیا کیا تو نے نہ تکی
مصروف اِتنی زندگی
کہ چُوڑیاں پہنی نہیں
جو چُنریاں رنگین تھیں
وہ دھوپ لیکراُڑ گیئں
میری عمر کی تتلیاں
اب اور جانِب مڑ گئیں
اب دوپٹوں پر کبھی نہ
گوٹا موتی ٹانکتی ہوں
سوئیاں ہاتھوں پر نہیں اب
د ل کو اپنے ٹانکتی ہوں
خوشبوؤں کے دیس سے
میں دُور اِتنی آگئی
جینے کی خاطر
مرد سا
انداز میں اپنا گئی
رِشتوں کو ناطوں کو نبھاتے
فرض ادا کرتے ہوئے
تُو نے جو چونکایا لگا
مدّت ہوئی عورت ہوئے

Leave your vote

0 points
Upvote Downvote

Total votes: 0

Upvotes: 0

Upvotes percentage: 0.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

جواب چھوڑیں

Hey there!

Forgot password?

Forgot your password?

Enter your account data and we will send you a link to reset your password.

Your password reset link appears to be invalid or expired.

Close
of

Processing files…

Situs sbobet resmi terpercaya. Daftar situs slot online gacor resmi terbaik. Agen situs judi bola resmi terpercaya. Situs idn poker online resmi. Agen situs idn poker online resmi terpercaya. Situs idn poker terpercaya.

situs idn poker terbesar di Indonesia.

List website idn poker terbaik.

Situs slot terbaru terpercaya

slot hoki terpercaya

Bergabung di Probola situs judi bola terbesar dengan pasaran terlengkap bergabunglah bersama juarabola situs judi bola resmi dan terpercaya hanya di idn poker terpercaya 2022 daftar sekarng di agen situs slot online paling baik se indonesia
trading binomo bersama https://binomologin.co.id/ daftar dan login di web asli binomo