غزل اور نظم کے خوبصورت شاعر رانا سعید دوشی کا انٹرویو

تفکر – آپ کا پورا نام؟
سعید دوشی – رانا محمد سعید
تفکر – قلمی نام؟
سعید دوشی -رانا سعید دوشی
تفکر – کہاں اور کب پیدا ہوئے؟
سعید دوشی – 4 اپریل 1965 پھلروان ضلع سرگودھا میں پیدا ھوا ۔
تفکر – تعلیمی قابلیت؟
سعید دوشی -ایم اے، ایل ایل بی
تفکر – ابتدائی تعلیم کہاں سے حاصل کی؟
سعید دوشی – ابتدائی تعلیم، آبائی قصبہ، پھلروان ضلع سرگودھا اس کے بعد، حسن ابدال میٹرک تک میں تعلیم حاصل کی۔
تفکر – اعلی تعلیم کہاں سے حاصل کی؟
سعید دوشی – کامرس کالج سرگودھا اور پھر اس کے بعد پنجاب یونیورسٹی لاہور۔
تفکر – پیشہ؟
سعید دوشی – سرکاری ملازمت۔

تفکر – ادبی سفر کا آغاز کب ہوا؟
سعید دوشی – 1980 سے شاعری کا شوق ہوا ، ابتدا میں کچھ افسانے بھی لکھے جو مختلف جگہوں پر چھپے بھی مگر بعد میں صرف شاعری کی طرف ہی طبیعت مائل رہی چپھنے چھپانے کا سلسلہ نہ ہونے کے براپر رہا، شاعری مشاعروں اور فلمی نغمہ نگاری تک محدود رہی اور بعد ازاں 1990 میں باقاعدہ اخبارات کے ادبی صفحات تک رسائی ہوئی، اس کے بعد فنون، اوراق، تسطیر، شعر و سخن، جیسے دیگر پرچوں میں بھی اشاعت کا سلسلہ چل پڑا۔
تفکر – آپ نظم یا غزل میں کس سے متاثر ہوئے؟
سعید دوشی -نظم اور غزل دونوں کی میری پسندیدہ اصناف ہیں،دونوں ہی لکھتا آیا ہوں، وقت نہ ملنے کے سبب افسانہ ترک کر دیا۔
تفکر – کسی شاعر یا ادیب کا تلمذ اختیار کیا؟
سعید دوشی – ابتدا میں جناب شوکت راز کی شاعری سے ہی متاثر تھا، اور بحیثیت شاعر پہلا شاعر تھا جسے میں نے سنا، پڑھا اور شاعری کی طرف راغب ہوا، مگرا باقاعدہ استادی، شاگردی کا سلسلہ کسی سے نہیں رہا ۔میں سمجھتا ہوں کہ میں نے ہر شخص سے سیکھا ہے اور ہر شخص میرا استاد ہے، مگر ، وقت، سب کا استاد ہوتا ہے اور میں بھی وقت کو ہی اپنا استاد سمجھتا ہوں۔
تفکر – ادب کی کون سی صنف زیادہ پسند ہے؟
سعید دوشی – جہاں تک پسندیدگی کا تعلق ہے تو افسانہ، غزل اور نظم بہت بھلی لگتی ہے۔ نثری تحریریں دلچسپی سے پڑھتا ہوں مگر خود صرف شاعری کی کرتا ہوں۔
تفکر – ادب کی کس صنف میں زیادہ کام کیا؟

سعید دوشی – غزل اور نظم میں کام کیا ۔

تفکر – اب تک کتنی تصانیف شائع ہو چکی ہیں؟

سعید دوشی – فی الحال ایک ہی کتاب ” زمیں تخلیق کرنی ہے ” کے نام سےمنظر عام پر آ سکی ہے جو نظموں اور غزلوں پر مشتمل ہے جس کے دو ایڈیشن چھپ چکے ہیں،پہلا ایڈیشن 2006 میں ہم قلم پبلیشنر راولپنڈی سے چھپا اور دوسرا 2010 میں رومیل پبلی کیشنز، راولپنڈی سے شائع ہوا، اردو غزلوں کا مجبوعہ “آگ میں اجالا ہے ” کے نام سے اور اردو ںظموں پر مشتمل کتاب ” بانسوں کے جنگل” زیر طبع ہے، اس کے ساتھ پنجابی شاعری، نظم اور غزل ” اور ہیر وارث شاہ کے حوالے سے منظوم تنقید ” مقدمہ کیدو بنام وارث شاہ” بھی زیر طبع ہے

شعری تصانیف

  • زمیں تخلیق کرنی ہے

تفکر – اپنے خاندان کے حوالے سے کچھ بتائیں؟
سعید دوشی -میرے والد صاحب رانا محمد بشیر سرکاری ملازم تھے، ہم 6 بھائی اور تین بہنیں ہیں۔

تفکر – ازدواجی حیثیت؟
سعید دوشی – شادی شدہ۔

تفکر – فیملی ممبرز کے بارے میں بتائیے؟
سعید دوشی – میری اہلیہ سرکاری سکول میں ٹیچر ہیں، میری تین بیٹیاں اور دو بیٹے ہیں۔
تفکر – آج کل کہاں رہائش پذیر ہیں؟
سعید دوشی – آج کل میں ٹیکسلا کے ایک گاوءں، عثمان کھٹڑ میں رہائش پذیر ہوں جبکہ میری ملازمت راولپنڈی میں ہے۔
تفکر – بچپن کی کوئی خوبصورت یاد؟
سعید دوشی – میرا سارا بچپن ہی خوب صورت ہے۔
تفکر – ادبی سفر کے دوران میں کوئی خوبصورت واقعہ؟
سعید دوشی – کوئی ایک ہو تو بتائیں، یہ پوری دنیا ہی خوب صورت ہے۔

تفکر – ادبی رسائل سے وابستگی؟

سعید دوشی – اصرف ایک لکھاری کی حیثیت سے ہر اخبار اور ہر رسالہ سے وابستہ ہوں۔
تفکر – ادبی گروپ بندیوں اور مخالفت کا سامنا ہوا؟
سعید دوشی – یہ بھی کوئی پوچھنے کی بات ہے۔
تفکر – ادب کے حوالے سے حکومتی پالیسی سے مطمئن ہیں؟
سعید دوشی – حکومت کا ادب سے کیا تعلق۔
تفکر – اردو ادب سے وابستہ لوگوں کے لئیے کوئی پیغام؟
سعید دوشی – ایک ہی پیغام ہے کہ جو لکھو۔۔۔ اپنا لکھو۔
تفکر – ہماری اس کاوش پر کچھ کہنا چاہیں گے؟
سعید دوشی – ابتدا تو بھلی لگ رہی ہے، مگر جب کام سامنے آئے گا تو بہتر رائے دے سکوں گا۔۔
تفکر – پہچان شعر یا تحریر؟

  • رائے ہے محفوظ میری میں ابھی خاموش ہوں
    دیکھ پایا ہوں ابھی تک ایک رخ تصویر کا
    میں چپ رہا تو مجھے مار دے گا میرا ضمیر
    گواہی دی تو عدالت میں مارا جاوءں گا
  • عشق کے نام پہ خیرات بھی لے لیتے ہیں

یہ وہ صدقہ ہے جو سادات بھی لے لیتے ہیں

  • کہاں کسی کی حمایت میں مارا جاوں گا
    میں کم شناس! مروت میں مارا جاؤں گا
    میں مارا جاوں گا پہلے کسی فسانے میں
    پھر اس کے بعد حقیقت میں مارا جاؤں گا

مرا یہ خون مرے دشمنوں کے سر ہو گا

میں دوستوں کی حراست میں مارا جاؤں گا

میں چپ رہا تو مجھے مار دے گا میرا ضمیر

گواہی دی تو عدالت میں مارا جاؤں گا

حصص میں بانٹ رہیں ہیں مجھے مرے احباب

میں کاروبار شراکت میں مارا جاؤں گا

بس ایک صلح کی صورت میں جان بخشی ہے

کسی بھی دوسری صورت میں مارا جاوں گا

نہیں مروں گا کسی جنگ میں یہ سوچ لیا

میں اب کی بار محبت میں مارا جاؤں گا

S N 06

Leave your vote

1 point
Upvote Downvote

Total votes: 1

Upvotes: 1

Upvotes percentage: 100.000000%

Downvotes: 0

Downvotes percentage: 0.000000%

جواب چھوڑیں

Hey there!

Forgot password?

Forgot your password?

Enter your account data and we will send you a link to reset your password.

Your password reset link appears to be invalid or expired.

Close
of

Processing files…

Situs sbobet resmi terpercaya. Daftar situs slot online gacor resmi terbaik. Agen situs judi bola resmi terpercaya. Situs idn poker online resmi. Agen situs idn poker online resmi terpercaya. Situs idn poker terpercaya.

situs idn poker terbesar di Indonesia.

List website idn poker terbaik.

Situs slot terbaru terpercaya

slot hoki terpercaya

Bergabung di Probola situs judi bola terbesar dengan pasaran terlengkap bergabunglah bersama juarabola situs judi bola resmi dan terpercaya hanya di idn poker terpercaya 2022 daftar sekarng di agen situs slot online paling baik se indonesia
trading binomo bersama https://binomologin.co.id/ daftar dan login di web asli binomo